Warning: "continue" targeting switch is equivalent to "break". Did you mean to use "continue 2"? in /home/horla/public_html/wp-content/plugins/jetpack/_inc/lib/class.media-summary.php on line 77

Warning: "continue" targeting switch is equivalent to "break". Did you mean to use "continue 2"? in /home/horla/public_html/wp-content/plugins/jetpack/_inc/lib/class.media-summary.php on line 87

Warning: "continue" targeting switch is equivalent to "break". Did you mean to use "continue 2"? in /home/horla/public_html/wp-content/plugins/jetpack/modules/infinite-scroll/infinity.php on line 155
نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے.....ناصرکاظمی - Lahori
Home / ادب وثقافت / نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے…..ناصرکاظمی

نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے…..ناصرکاظمی

غزل

نئے کپڑے بدل کر جاؤں کہاں اور بال بناؤں کس کے لیے

وہ شخص تو شہر ہی چھوڑ گیا میں باہر جاؤں کس کے لیے

جس دھوپ کی دل میں ٹھنڈک تھی وہ دھوپ اسی کے ساتھ گئی

ان جلتی بلتی گلیوں میں اب خاک اڑاؤں کس کے لیے

وہ شہر میں تھا تو اس کے لیے اوروں سے بھی ملنا پڑتا تھا

اب ایسے ویسے لوگوں کے میں ناز اٹھاؤں کس کے لیے

اب شہر میں اُس کا بدل ہی نہیں کوئی ویسا جانِ غزل ہی نہیں

ایوانِ غزل میں لفظوں کے گلدان سجاؤں کس کے لیے

مدت سے کوئی آیا نہ گیا سنسان پڑی ہے گھر کی فضا

ان خالی کمروں میں ناصر اب شمع جلاؤں کس کے لیے

کے بارے میں ویب ڈیسک

بھی چیک

پتھربنا دیا مجھے رونے نہیں دیا…..ناصرکاظمی

پتھربنا دیا مجھے رونے نہیں دیا دامن بھی تیرے غم میں بھگونے نہیں دیا تنہائیاں …

جواب دیجئے

%d bloggers like this: