Home / تاریخ / لاریکس کالونی…ریٹائرڈ ریلوے ملازمین کی بستی

لاریکس کالونی…ریٹائرڈ ریلوے ملازمین کی بستی

اس رہائشی علاقے کو باقاعدہ کالونی کا درجہ حاصل ہے۔ لاریکس سوسائٹی کالونی ایک طرف مین بازار گڑھی شاہواوردوسری جانب مغلپورہ سے جاملتی ہے۔ اس کی تاریخ پر نظرڈالی جائے توپتہ چلتاہے کہ پاکستان ریلوے نے 1979ء میں اس علاقے میں اپنی فاضل اراضی کو چھوٹے پلاٹوں میں تقسیم کرکے محکمہ ریلوے کے ریٹائرڈملازمین کو لیز پر الاٹ کیا۔ محکمہ ریلوے نے کوآپریٹو کواراضی دی اوراسے’’ لاہور ایریا آف ریلوے ایمپلائز کوآپریٹو ہاؤسنگ سوسائٹی‘‘ ( لاریکس سوسائٹی) نام دیاگیا۔ یہ کالونی اپنے مخفف’’لاریکس کالونی‘‘ کے نام سے جانی جاتی ہے۔ اس کالونی کے ساتھ ہی ان ریلوے ملازمین کے رہائشی کوارٹر ہیں جو ابھی ریٹائرڈ نہیں ہوئے ۔علاقے کے بعض مکینو ں نے اپنے کوارٹروں کے باہرغیر قانونی طورپرریل گاڑی کی پرانی لائنیں لگارکھی ہیں ۔کچھ لوگ یہاں پلاٹوں کے حوالے سے بھی بے ضابطگی کی شکایت کرتے رہے ہیں۔نعیم مرتضیٰ

کے بارے میں ویب ڈیسک

بھی چیک

Ram Thaman

گائوں رام تھمن

گائوں رام تھمن رائے ونڈ کے بیچ راجہ جنگ ریلوے اسٹیشن سے پانچ کلومیٹر کے …

جواب دیجئے

%d bloggers like this: